ONLINE ORDER
Muhammad Nadeem Bhabha
Search Tumharay Saath Rehna Hai | تمہارے ساتھ رہنا ہے
Ghazlen - غزلیں

یہ پیڑ اور پرندے عجب اُداسی ہے

یہ پیڑ اور پرندے عجب اُداسی ہے
ترے بغیر مرے یار سب اداسی ہے
گئے وہ دن کہ مری بانہوں میں تُو ہوتا تھا
اُٹھے ہیں ہاتھ مگر ان میں اب اُداسی ہے
نہ سر ہی پھوڑا نہ بالوں کو میں نے نوچا کبھی
اُداس ہوں یہ مگر دوست کب اُداسی ہے
نوازنا ہے شہنشاہ گر تو عشق نواز
میں وہ فقیر ہوں جس کی طلب اُداسی ہے
رہا نہ ہجر مگر میں اُداس ہوں پھر بھی
مِری اُداسی کا شاید سبب اداسی ہے
اُسے کہو کہ مرے سانس اُکھڑ رہے ہیں ندیم ؔ
اُسے بتائو کہیں جاں بہ لب اُداسی ہے