ONLINE ORDER
Muhammad Nadeem Bhabha
Search Maen Kahin Aur Ja Nahin Sakta | میں کہیں اور جا نہیں سکتا
Ghazlen - غزلیں

کچھ سخن مشورہ کروں گا میں

کچھ سخن مشورہ کروں گا میں
اُس کی آنکھیں پڑھا کروں گا میں
زندگی پھر نئی نئی سی ہو
اب کوئی حادثہ کروں گا میں
ریت پر پائوں جم نہیں سکتے
ختم یہ سلسلہ کروں گا میں
صورتِ اشک تجھ میں آئوں گا
آنکھ بھر میں رہا کروں گا میں
اُس کی تصویر گھر میں لائوں گا
اُس سے باتیں کیا کروں گا میں
اور تو کچھ نہ دے سکوں گا تجھے
تیرے حق میں دعا کروں گا میں
چاند ناراض ہو گیا تو ندیم ؔ
گھر میں تنہا رہا کروں گا میں