ONLINE ORDER
Muhammad Nadeem Bhabha
Search Haal | حال
Ghazlen - غزلیں

جس نے جتنا پا لیا لکھیا کے سب کھیل

جس نے جتنا پالیا لِکھیَا کے سب کھیل
ہم مستوں میں مست ہیںمولےٰ کے سب کھیل
جس جس کو بھی پیاس ہے دیکھے وہی سراب
اونٹوں والے جانتے صحرا کے سب کھیل
خاکی خاک نشین ہیں ،خاکی تخت نشین
مرضی مولےٰ آپ کی دنیا کے سب کھیل
دیکھو تو سب عام ہے سوچو تو سب خاص
خاص سے خاص الخاص تک مولےٰ کے سب کھیل
وصل میں دونوں ایک ہیں یعنی دو تو تھے
ہجر میں ہیں تنہائیاں ، تنہا کے سب کھیل